انتظار

Posted in دھوپ کا خیمہ

انتظار


شوخ  چہکتی دھو ل کسی کے  نام کریں
پیلے پیلے پھول کسی کے نام کر یں
اپنا نظم نزول کسی کے نام کر یں
کویٴ ملے تو ر نگ رکھیں ہم ہا تھ پہ اُس کے
کویٴ ملے تو بات کریں ہم خوشبو خوشبو  لفظ پہن کر
پیلے ہا تھ کریں ہم قو سِ  قز ح  کے
کویٴ ملے تو ہم ہو نٹ رکھیں
شا دا ب ہتھیلی  پر اُس کی
شوخ  چہکتی دھو ل یو نہی بے کار پڑ ی ہے
پیلے پیلے پھو ل یو نہی خا موش کھڑے ہیں